نمونیا

نمونیا

نمونیا پھیھڑوں کا ایک انفکیشن جو جو ہلکے درجے سے شدید درجے کاہوسکتا ہے جس کی وجہ سے آپ کو ہسپتال جانا پڑتا ہے، یہ انفکیشن ایک یا دونوں پھیپھڑوں میں ہوا کی تھیلیوں کو بھڑکاتا ہے جو سیال مادے یا پیپ سے بھر سکتا ہے جو سانس لینے کیلئے آپ کے پھیپھڑوں کیلئے مشکل کا باعث بنتا ہے۔

:نمونیا کی وجوہات

بیکٹیریا، وائرس یا پھپھوندی نمونیا کی وجہ ہوسکتی ہے۔ •
نزلہ کے وائرس •
سردی کے وائرس •
آر وی ایس وائرس) ایک سال یا چھوٹے بچوں میں نمانیا کی بڑی وجہ ہے) •
بیکٹیریا جسے زنجیری نبقہ یا مائکو پلاسما •
اگر آپ کا نمونیا بیکٹیریا یا ایک وائرس کی وجہ سے ہواتو آپ اسے کسی دوسرے شخص میں منتقل کرسکتے ہیں۔ •
کثرت کے ساتھ سگریٹ نوشی یا شراب نوشی جیسی عادات سے بھی آپ کو نمونیا ہونے کے امکانات زیادہ ہوسکتے ہیں۔ •

:نمونیا کی علامات

آپ کے نمونیا کی علامات آپ کی عمر اور مجموعی صحت کی بنا پر مختلف ہوسکتی ہیں، یہ علامات عمومی طور پر کئی ہفتوں میں پیدا ہوتی ہیں۔
:مشترک علامات درجہ ذیل ہیں
جب آپ سانس لیں یا کھانسیں تو چھاتی میں درد کا محسوس ہونا •
کھانسی جو بلغم پیدا کرتی ہے •
تھکاوٹ اور بھوک میں کمی •
بخار، پسینہ آنا اور سردی کا لگنا •
متلی، الٹی اور اسہال •
مشکل سے سانس لینا •

:نمونیا کی اقسام

نمانیااور اس کے نتیجے میں انفیکیشن کا باعث بننے والے جراثیموں کی اقسام کے مطابق نمونیا کی درجہ بندی ہے۔

آبادی سے لگنے والا نمونیا: یہ نمونیا کی انتہائی عام قسم ہے جو ہسپتال یا حفظان صحت کی سہولیات کے باہر پائی جاتی ہے جس سے نمونیا ہوسکتا ہے۔

زنجیری نبقہ نمونیا جیسا بیکٹیریا اس قسم کی انتہائی عام وجہ ہے،  جب آپ کو نزلہ یا سردی لگے تو یہ خودبخود ہوجاتا ہے، یہ پھیپھڑے کے ایک حصے کو متاثر کرسکتا ہے، اس صورتحال کو قصوصی نمانیا کہتے ہیں۔

مائکو پلاسما نمونیا جیسا بیکٹیریا کم نوعیت کی علامات پیدا کرتا ہے جو عام طور پر اتنی سخت نہیں ہوتیں کہ آپ کو آرام کی ضرورت ہو۔

پھپھوندی کی قسم کا نمونیا ان لوگوں کو زیادہ ہوتا ہے جن میں دائمی صحت کے مسائل یا مدافعتی نظام کمزور ہوتا ہے، یہ نمونیا ان لوگوں کو بھی ہوتا ہے جوبڑی مقدار میں ادویات لیتے ہیں۔

کورونا وائرس سمیت وائرس، سردی اور نزلہ کا باعث بننے والے بعض وائرس سے نمونیا ہوسکتا ہے، پانچ برس سے کم عمر کے بچوں میں

نمونیا کی یہ سب سے عام وجہ ہے، وائرس سے ہونے والا نمونیا عموماً کم نوعیت کا ہوتا ہے لیکن بعض اوقات یہ انتہائی سنگین ہوسکتاہے، کورونا وائرس نمونیا کا سبب بن سکتا ہے جو سنگین نوعیت کا ہوسکتاہے۔

ہسپتال سے ہونے والا نمونیا: ہسپتال کے مریض سے متعلق متعدی مرض عمومی طور پران کو ہوتا ہے جو کسی دوسری بیماری کی وجہ سے بیمار یا ہسپتال میں زیرعلاج ہوتے ہیں، یہ سنجیدہ نوعیت کا ہوسکتا ہے کیونکہ اس کی وجہ بننے والا بیکٹیریا اینٹی بائیوٹکس کیخلاف زیادہ مزاحم ہوسکتا ہے یا اس نمونیا کا شکار ہونے والے افراد میں اس قسم کے نمونیا کا زیادہ خطرہ ہوتاہے۔

حفظان صحت سے ہونے والا نمونیا: حفظان صحت سے ہونے والا نمونیا بیکٹیریا سے ہونے والا ایک متعدی مرض ہے جو ان لوگوں میں ہوتا ہے جو طویل مدتی نگہداشت کی سہولتوں میں رہتے ہیں یا جن کی باہر سے آنے والے مریضوں کے کلینکس میں دیکھ بھال کی جاتی ہے۔

پریشانی کا نمونیا: پریشانی کا نمونیا اس وقت ہوتا ہے جب آپ کھانا، پینا، الٹی یا تھوک کو کھینچتے ہیں ، تشویش کا امکان اس وقت زیادہ ہوتا ہے جب کوئی معمولی چیز آپ کو پریشان کرے، جیسے دماغی چوٹ یا نگلنے کا مسئلہیا شراب یا ادویات کا بے انتہا استعمال۔

 :پیچیدگیاں

آپ کے پھیپھڑوں سے خون میں شامل ہونے والا بیکٹیریا ممکنہ طور پر جسم کے دوسرے اعضا میں انفیکشن کو پھیلا سکتا ہے جو کسی عضو کو ناکارہ بنانے کا سبب بن سکتی ہے۔

 مشکل سے سانس لینا •
 پھیپھڑوں کے اردگرد سیال مادے کا جمع ہونا •
پھیپھڑوں کا پھوڑا •

: تشخیص

 خون کا ٹیسٹ •
چھاتی کا ایکسرے •
 نبض چیک کرانا •
 تھوک کاٹیسٹ •
سی ٹی سکین •
 سیال ثقافت کا ٹیسٹ •

:علاج 

اینٹی بائیوٹکس •
 کھانسی کی ادویات •
 بخارکم کرنا یا درد کو دور کرن •